کیٹیگری: خبریں

مہدی فاؤنڈیشن نیو دہلی سینٹر کی ایک ٹیم کاحضرت مخدوم سید علاؤالدین العروف صابر پیا کے سالانہ عرس پر جانا ہوا ۔ زائرین کی کثیر تعداد وہاں زیارت کے لئے جاتی ہے ۔ یہاں پر لوگوں کا ہر وقت تانتا بندھا رہتا ہے ۔ یہاں ہماری ٹیم نے سرکار سیدنا گوھر شاہی کی چاند سورج اور حجر اسود میں موجود نشانیوں والے بینز ز آویزاں کئے ۔عرس کے موقع پر آنے والے عقیدت مندوں کوامام مہدی کی آمد کی خوشخبری دی گئی۔ چاند سورج اور حجر اسودمیں نمایاں ہوئی نشانیوں اور ان سے ہونے والے فوائد سےبھی لوگوں کو آگاہی دی گئی اور معلوماتی لیفلٹ فراہم کیا گیا۔عرس میں آئے ہوئے لوگوں کو بتایا گیا کہ چاند والی ایک تصویرِ مبارک ساری دنیا کو عشقِ الہی دے رہی ہے ۔ اگر آپ اللہ کا عشق چاہتے ہیں تو چاند والی تصویر کو دیکھ کر تین بار ’’اللہ ھو، اللہ ھو‘‘ پڑھیں تو آپکو اذنِ قلب عطا ہو جائے گا ۔ بہت سے ذائرین نے یہ سن کر سرکار سیدنا امام مہدی گوھر شاہی کی تصویرِ مبارک کے سامنے ’’اللہ ھو‘‘ پڑھ کر اذنِ قلب حاصل کیا۔
اس کے بعد لوگوں کو حجر اسود میں موجود شبیہ مبارک کی عظمت بتائی گئی کہ حجر اسود میں موجود ایک تصویرگوھر شاہی آدم ؑ سے لیکر آج تک انسانوں کی شفاعت کا مظہر اتم ہے ۔ جس شخص نے بھی عقیدت و محبت سے زندگی میں ایک بار حجر اسود کو بوسہ دے دیا ، یہ تصویر اُسکے زندگی بھر کے گناہ ختم کر دیتی ہے اور بروز محشر اُسکے اس فعل کی گواہی دے گاجس سے اسکی شفاعت ہو جائے گئی۔ یہ سن کر بہت سے لوگوں نے بینرز میں موجود حجر اسود کی تصویر مبارک کو بوسے دئیے۔ پورے علاقے میں امام مہدی گوھر شاہی آگئے ہیں یہ دھوم مچ گئی ۔ اور لوگ بڑی تعداد میں سیدنا امام مہدی گوھر شاہی کی تصویرِ مبارک اپنے ساتھ لے کر گئے کہ یہ تصویر ہم اپنے گھر میں آویزاں کریں گےاور کچھ لوگوں نے اپنے موبائل میں محفوظ کر لیں۔
نوائیڈا سے آئے ہوئے شبیر بھائی نے بھی بہت محبت سے سیدنا گوہر شاہی کا پیغام سنا اور اپنی رائے کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ جو روحانی تعلیم آپ لوگ بتا رہے ہیں آج کل کے پیر فقیر یہ تعلیم نہیں بتاتے ۔ انھیں بس پیسے جمع کرنے سے غرض ہے کوئی تصوف کا رنگ نظر نہیں آتا ۔انھیں سرکار سیدنا گوھر شاہی کی نشانیوں والا لیفلٹ دیا گیا اور ہمارے یو ٹیوب پرالرٰا چینل کالنک دیا گیاکہ مزید سوالات کے جوابات آن لائن بھی حاصل کر سکتے ہیں ۔
2016-December-16-LEAFLETING-India-Sabir Piya Urs, Delhi

متعلقہ پوسٹس

دوست کے سا تھ شئیر کریں